Baat Say Baat / بات سے بات by Wasif Ali Wasif (Aphorisum)

599.00

Delivery All Over Pakistan Charges Will Apply.

Title May Be Different.

Due to constant currency fluctuation, prices are subject to change with or without notice.

Categories: , , Tags: , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , ,

بات سے بات
واصف علی واصف
———————————————————————————-
واصف علی واصف کہتے ہیں:
اہلِ بینش، اہلِ نظر اور اہلِ دل حضرات دنیا میں رہتے ہوئے بھی کسی اور دنیا میں رہتے ہیں اور اس دنیا میں پرانے چراغوں سے نئی روشنی حاصل کی جاتی ہے۔یہ کتاب کوشش ہے کہ اس روشنی کا پرتو پیش کیا جائے۔۔۔ روشنی تو روشنی ہے۔ کسی کی دسترس میں نہیں۔۔۔ نور، منور کرتا ہے۔۔۔ اور جب آنکھ منور ہو تو دل منور ہے۔۔۔ منور دل کو دریا کہا گیا ہے۔۔۔ دریا رواں دواں، یقین کے راستے پر چلنے والا، کناروں سے نکلتا ہوا اپنی منزلِ مقصود کی طرف، راستے میں کبھی نہ ٹھہرنے والا، ہمیشہ گامزن، انجامِ کار اپنی منزل مراد سے واصل ہوتا ہے۔۔۔ سمندر کی آغوش میں ہمیشہ ہمیشہ کے لیے۔۔۔ سمندر کا دل دریا ہے اور دریا کا دل سمندر ہے۔۔۔ چشمِ بینا کے جلوے ہیں ورنہ کہاں دل، کہاں دریا اور کہاں سمندر۔۔۔ پیار بھرے دل، میٹھے دریا اور کڑوے سمندر۔۔۔ لیکن چشم بینا کے لیے ورق در ورق نئی کائنات ہے۔۔۔حاضر ہیں یہ چند مضامین۔۔۔ پرانے چراغ۔۔۔ شاید ان میں نئی روشنی ہو۔۔۔ چشمِ بینا آپ کے پاس ہے، آپ کے اپنے پاس!!(واصف علی واصف)

Reviews

There are no reviews yet.

Be the first to review “Baat Say Baat / بات سے بات by Wasif Ali Wasif (Aphorisum)”
Review now to get coupon!

Your email address will not be published. Required fields are marked *